حاملہ مسلمان خاتون پر تشدد ،لیکن وجہ کیا بنی؟ جان کر آپ کو دکھ ہوگا

Spread the love

بھارت میں درد زہ کے باعث ہسپتال آنے والی مسلمان خاتون پر کورونا وائرس پھیلانے کا الزام عائد کرکے تشدد کا نشانہ بنایا گیا جس کی وجہ سے خاتون کا حمل ضائع ہوگیا۔
حاملہ رضوانہ خاتون درد زہ اور خون بہنے کی شکایت کے باعث ایم جی ایم اسپتال پہنچی جہاں انہیں پرچی بنوانے کے لیے مسلمان مریضوں کے لیے بنائی گئی قطار میں کھڑا کردیا گیا۔اس دوران خاتون کا خون فرش پر گر گیا جس پر ہسپتال انتظامیہ اور ہندو مریضوں نے ہنگامہ کھڑا کردیا اور خاتون سے خون صاف کرنے کو کہا کیوں کہ اس سے کورونا وائرس دیگر مریضوں میں لگنے کا خدشہ ہوسکتا تھا۔ خاتون کمزوری اور نقاہت کے باعث ایسا نہ کرسکیں تو جنونی ہندوؤں نے چپلوں سے مارا پیٹا۔
مشتعل ہجوم کے تشدد سے مسلمان خاتون کی طبیعت مزید بگڑ گئی اور ان کا حمل ضائع ہوگیا۔ متاثرہ خاتون نے وزیراعلیٰ ہیمنت سورین کو شکایتی خط لکھا جس پر متعلقہ علاقے کے ڈی ایس پی کو انکوائری کرنے کا حکم دیا گیا تاہم اب تک کسی قسم کی کارروائی عمل میں نہیں لائی گئی ہے۔

5 تبصرے “حاملہ مسلمان خاتون پر تشدد ،لیکن وجہ کیا بنی؟ جان کر آپ کو دکھ ہوگا

  1. I like it when folks get together and share ideas. Great site, keep it up! I could not refrain from commenting. Well written! Ahaa, its fastidious dialogue on the topic of this article here at this weblog, I have read all that, so now me also commenting at this place. http://newground.com

اپنا تبصرہ بھیجیں