“اس وقت پاکستان تین بڑی قدرتی آفات سے گزر رہا ہے،پہلی کورونا اور دوسری۔۔۔”حکومتِ سندھ کا وفاق سے احتجاج کا فیصلہ

Spread the love

صوبائی حکومت نے ٹڈی دل کے سندھ میں فصلوں پرحملے کے وقت مدد نہ کرنے پروفاق سے احتجاج کا فیصلہ کیاہے وزیر زراعت محمد اسماعیل راہونے اپنے وڈیو بیان میں وفاقی حکومت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاہے کہ اس وقت پاکستان تین بڑی آفاتیں جھیل رہا ہے،پہلی کورونا،دوسری ٹڈی دل اور تیسر ی وفاقی حکومت جو دونوں وباﺅں کو بڑھا رہی ہے۔
نیازی سرکار ہاتھ پر ہاتھ دھرے بیٹھی ہے، لوگوں کو کوروناوائرس ہلاک کررہاہے اور فصلوں کوٹڈی دل کھاکر ناس کررہی ہے،اتنی بڑی زرعی قومی ایمر جنسی میں وزیراعظم کا کردار فقط ایک تماشہ بن کررہ گیاہے، ٹڈی دل کورونا سے زیادہ خطرناک ثابت ہوگی اورپاکستان قحط کی لپیٹ میں آجائے گا، وفاق ٹڈی دل پر سندھ کی کوئی مدد نہیں کررہا،ٹڈی دل کی وجہ سے سندھ کی فصلیں تباھ ہورہی ہیں اوراس وقت سندھ سمیت پورے ملک کی زراعت کو ٹڈی دل سے شدید خطرات لاحق ہیں جس کا خاتمہ فضائی اسپرے سے ہی ممکن ہے،سندھ کے پاس فضائی جھاز اسپریکے لیے نہیں ہے یہ وفاق کا کام ہے،کئی علاقوں میں ٹڈی دل کاخاتمہ کرنے کیلیے سندھ حکو مت اپنے فنڈزسے گاڑیوں کے ذریعے اسپرے کررہی ہے۔

یہ بھی پڑھیے: پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کا فائدہ عام لوگوں تک پہنچایا جائے: وزیرِ اعظم

اسماعیل راہونے مزید کہاکہ عقل کے عاری حکمران کیوں نہیں سمجھتے، اگر ملک کی زراعت کو نقصان ہوا تو پورا ملک بھوک اور افلاس کے نظر ہو جائے گا،وفاق کو ایک سال سے خطرے سے آگاہ کررہے ہیں لیکن کورونا کی طرح ٹڈی دل میں بھی سندھ کو نظر انداز کیا جارہا ہے،ملک کی 60 فیصد دیہی آبادی کا انحصار 100 زراعت پر ہے,40 فیصد شہری آبادی کو بھی کھانے کی ضروری اشیازراعت سے ہی سپلائی ہوتی ہیں۔

“اس وقت پاکستان تین بڑی قدرتی آفات سے گزر رہا ہے،پہلی کورونا اور دوسری۔۔۔”حکومتِ سندھ کا وفاق سے احتجاج کا فیصلہ” ایک تبصرہ

اپنا تبصرہ بھیجیں